لائن آف کنٹرول پر بھمبر سیکٹر پر بھارتی سکیورٹی فورسز کی جانب سے بھاری ہتھیاروں سے بلا اشتعال گولہ باری اور فائرنگ کی گئی جو علی الصبح تک جاری رہی ،پاک فوج کی موثرجوابی کارروائی میں متعدد بھارتی فوجی ہلاک،کئی مورچے تباہ ہوگئے امن کی خواہش کو کمزوری نہ سمجھا جائےٴ بھارت ایل او سی پر کشیدگی سے دنیا کی توجہ مسئلہ کشمیر سے ہٹانے کی ناکام کوشش کر رہا ہے،وزیراعظم نوازشریف، جنرل راحیل شریف کی شہید جوانوں کی نماز جنازہ میں شرکت،بھارتی جارحیت کا بھرپور انداز میں جواب دےنگےٜ آرمی چیف


راولپنڈی ٟبےورورپورٹٞ بھارتی فوج نے ایل او سی پر بلا اشتعال فائرنگ کر کے 7 پاکستانی فوجیوں کو شہید کردیا۔ پاکستان کی جانب سے فائرنگ کا بھرپور جواب دیا گیا اور بھارتی چوکیوں کو موثر انداز میں نشانہ بنایا گیا۔ آئی ایس پی آر کے مطابق لائن آف کنٹرول پر بھمبر سیکٹر میں گزشتہ رات ایک بار پھر سیز فائر کی خلاف ورزی کرتے ہوئے بلا اشتعال فائرنگ کی جس کے نتیجے میں سات پاکستانی فوجی شہید ہوگئے۔ پاکستانی فوجیوں نے بھارتی فائرنگ کا بھرپور جواب دیا اور بھارتی چوکیوں کو موثر انداز میں نشانہ بنایا ۔ ذرائع کے مطابق پاک فوج نے بھر پور کارروائی کر تے ہوئے تین بھارتی چوکیوں کو تباہ کر دیا اور کئی بھارتی فوجی مار ے گئے۔پاکستان نے لائن آف کنٹرول پر بھارتی فوج کی فائرنگ کے نتیجے میں 7فوجی جوانوں کی شہادت پر بھارتی ہائی کمشنر کو دفتر خارجہ طلب کرکے شدید احتجاج ریکارڈ کرایا اور احتجاجی مراسلہ بھی حوالے کیا۔پیر کو دفتر خارجہ کے مطابق سیکرٹری خارجہ اعزاز چوہدری نے لائن آف کنٹرول کے بھمبر سیکٹر میں بھارتی فوج کی فائرنگ کے نتیجے میں 7فوجی جوانوں کی شہادت پربھارتی ہائی کمشنر گوتم بمباانوالہ کودفتر خارجہ طلب کرکے شدید احتجاج ریکارڈ کرایااور ایک احتجاجی مراسلہ بھی حوالے کیا جس میں پاکستانی فوج کے جوانوں کی شہادت مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ پاکستان اپنے دفاع کی پوری صلاحیت اور حق رکھتا ہے۔سیکرٹری خارجہ اعزا ز چوہدری کا کہنا تھاکہ بھارت سیز فائر کی خلاف ورزیاں بند کرے ،بھمبر سیکٹر پر بھارتی فوج کی فائرنگ کے نتیجے میں سات پاکستانی فوجیوں کی شہادت کے واقعے کی تحقیقات کرائی جائے ۔جبکہ جنرل راحیل شریف کی ایل او سی پر فائرنگ میں شہید ہونے والے جوانوں کی نماز جنازہ میں شرکت، ملک کے دفاع کا عزم اور شہدائ کو خراج عقیدت پیش کیا۔ آرمی چیف جنرل راحیل شریف نے لائن آف کنٹرول ٟایل او سیٞ پر بھارت کی فائرنگ سے شہید ہونے والے جوانوں کی نماز جنازہ میں شرکت کی۔ اس موقع پر ڈی جی ایم آئی اور کور کمانڈرز بھی موجود تھے۔ کنٹرول لائن پر شہید ہونے والوں میں حوالدار ظفر حسین، ابرار احمد اعوان، لانس نائیک محمد شوکت، لانس نائیک محمد حلیم، سپاہی پرویز، سپاہی محمد الیاس اور سپاہی محمد تنویر شامل ہیں۔ نماز جنازہ کے بعد شہدائ کی میتیں ان کے آبائی علاقوں کو روانہ کر دی گئیں۔بعد ازاں آرمی چیف کو کنٹرول لائن کی صورتحال پر تفصیلی بریفنگ بھی دی گئی۔ اس موقع پر جنرل راحیل شریف کا شہدائ کو خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے کہنا تھا کہ بھارتی جارحیت کا بھرپور انداز میں جواب دیا جائے گا۔ ملک کا ہر قیمت پر دفاع اور تحفظ کیلئے کوئی کسر اٹھا نہیں رکھی جائے گی۔ دفتر خارجہ کے مطابق بھارت کنٹرول لائن پر جنگ بندی معاہدہ کی مسلسل خلاف ورزی کررہا ہے عالمی برادری بھارت کی بلااشتعال فائرنگ اور مقبوضہ کشمیر میں انسانی خقوق کی خلاف ورزیوں کو نوٹس لے۔ترجمان دفتر خارجہ نے قومی مقصد کے لئے قربانی دینے والے بہادر جوانوں کو سلام پیش کرتے ہوئے کہا کہ قوم کو پانے بہادر سپوتوں پر فخر ہے۔ ادھر دفتر خارجہ کے ترجمان نفیس زکریا نے بھارت کی جانب سے سیز فائر معاہدے کی خلاف ورزی کی شدید مذمت کی۔اپنے ٹوئیٹر پیغام میں نفیس زکریا نے کہا کہ ہم بھمبر سیکٹر میں بھارت کی بلا اشتعال فائرنگ کی شدید مذمت کرتے ہیں جس کے نتیجے میں پاک فوج کے 7 جوان شہید ہوئے۔انہوں نے کہا کہ پاک فوج منہ توڑ جواب دے رہی ہے اور ہم ملک کی حفاظت میں جان کا نذرانہ دینے والوں کو سلام پیش کرتے ہیں۔پیر کو وزیراعظم محمد نوازشریف نے بھارتی فائرنگ سے قیمتی انسانی جانوں کے ضیائع پر گہرے دکھ کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ شہید ہونے والے جوانوں کو شاندار خراج عقیدت پیش کرتے ہیں۔وزیراعظم نے کہا کہ ہماری امن کی خواہش کو کمزوری نہ سمجھاجائے،بھارتی افواج کی جانب سے سیز فائر معاہدے کی مسلسل خلاف ورزی افسوسناک ہے،ہم کسی بھی جارحیت کا بھرپور جواب دینے کی صلاحیت رکھتے ہیں،بھارتی فوج لائن آف کنٹرول پر کشیدگی بڑھا رہی ہے۔وزیراعظم نے کہا کہ کشیدگی بڑھانے کا مقصد مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی بگڑتی ہوئی صورتحال سے دنیا کی توجہ ہٹانا ہے،بھارتی فوج مقبوضہ کشمیر کے نہتے عوام پر ناقابل بیان مظالم ڈھارہی ہے۔وزیراعظم نوازشریف نے کہا کہ بھارتی قبضے کیخلاف مقبوضہ کشمیر کے عوام اٹھ کھڑے ہوئے ہیں،بھارتی حکومت نوشہ دیوار پڑھنے میں ناکام ہوچکی ہے،بھارت ایل او سی پر کشیدگی کے زریعے دنیا کی توجہ مسئلہ کشمیر سے ہٹانے کی ناکام کوشش کر رہا ہے۔وزیراعظم نے شہدائ کے درجات کی بلند کیلئے خصوصی دعا کی،مادروطن کیلئے جان قربان کرنیوالوں کو ہمیشہ یاد رکھا جائے گا۔ 7 فوجی شہید